دودھ پلانے والی مائیں کیا کھائیں

قد رت نے ما ں کے دو د ھ میں وہ بنیا دی غذائیت رکھی ہے جو بچے کی جسما نی اور ذہنی نشو ونما کے لیے ضروری ہو تی ہے چو نکہ ما ں کی غذا دودھ کی صور ت میں بچے کی صحت اور نشو ونما میں اہم کردار ادا کرتی ہے۔ اس مزید پڑھیں

حمل کیسے ٹھہر تا ہے

ما ہو اری کے بعد خو اتین کے جسم میں ایک بیضہ بنتا ہے اور کچھ دنوں بعد خارج ہو جاتا ہے۔ مر د کا اسپرم خاتون کے اندر تین سے چار دن تک زندہ رہتا ہے۔ جبکہ خو اتین کے انڈے کی عمرچار سے بارہ گھنٹے ہو تی ہے۔ اگر مرد کی منی اورعورت مزید پڑھیں

ماہو اری کے دنوں میں احتیا ط اور علا ج

جب ایک بچی بلو غت کی عمر میں پہنچتی ہے تو اس کو بہت سے مسائل کا سامنا کر نا پڑ تا ہے۔ کیو نکہ وہ اپنے اندر ہو نے والی تبدیلیو ں سے نا واقف ہو تی ہے اور اس کو ان مسائل سے نپٹنے کے لیے وقت اور ما ں کے ساتھ کی مزید پڑھیں

ڈلیوری کے بعد احتیاط کر نا مت بھو لیں

ڈلیو ری آپریشن سے ہو یا نارمل ہمارے ہاں یہ المیہ ہے کہ خو اتین صر ف دوران حمل ہی احتیا ط کر تی ہیں اس کے بعد نہ وہ اپنی غذا کا خیال رکھتی ہیں اور نہ ہی اپنا خیال رکھنے کا وقت ملتا ہے۔ حالانکہ اگر دیکھا جائے تو زچگی کے بعد بھی مزید پڑھیں

دوران حمل قے آنے کی وجوہا ت اور علا ج

دوران حمل عور ت میں بے شمار تبدیلیاں آتی ہیں۔ جو تقر یباً ہر عورت میں ہو تی ہیں۔ کسی میں کم اور کسی میں زیادہ ، ان کی وجہ ہارمو ن کی تبدیلی کو کہا جاتا ہے۔ جیسے ہی خو اتین کے اندرونی ہارمو نز بدلتے ہیں۔ اس میں تبدیلی آنا ایک فطری عمل مزید پڑھیں

رحم کی کمزوری

خو اتین کی بہت سی بیماریوں میں ایک بیماری رحم کی کمزور ی بھی ہے جو اس کے لیے بے حد تکلیف دہ ثابت ہو تی ہے اس میں عورت کو ذہنی اذیت بھی سہنا پڑتی ہے۔ کیو نکہ اس مر ض میں وہ بچہ پیدا کر نے سے معذور ہو تی ہے۔ اول تو مزید پڑھیں

دوران حمل رونما ہو نے والی تبدیلیا ں

حمل کے دوران خو اتین میں بے شمار تبدیلیاں آتی ہیں۔ جن کا ہر عورت کو سامنا کر نا پڑتا ہے۔ لیکن یہ ضروری نہیں ہو تا کہ سب عورتوں میں ایک جیسی تبدیلی رونما ہو ۔ ہر عورت کی تبدیلی اس کے ہارمو نز کے مطابق ہو تی ہے۔پہلی بار ماں بننے والی خو مزید پڑھیں

دوران حیض مبا شرت کر نے کے نقصان

اکثر مر د دوران حیض مبا شرت کرنے کو غلط نہیں سمجھتے ۔ اکثر مر د تو اس بات سے بے خبر ہو تے ہیں کہ دوران حیض مباشر ت نہیں کر نی چاہیے۔ اسے آپ ناسمجھی کا فقدان بھی کہہ سکتے ہیں کہ وہ اس اہم با ت سے بے خبرہو تے ہیں۔ کچھ مزید پڑھیں