گڑ سے وزن کم کر یں

اگر وزن کم کر نے کی بات کی جائے تو گڑ وزن کم کر نے کے لیے معا ون ہے یہ جسم کو گر م رکھتا، جگر کو صاف کر تا،نظام ہاضمہ کو بہتر کر تا، میٹا بو لزم کو تیز کر تا اور تو انائی کو بہتر کر تا ہے۔
ہم سب ہی بیکری کی اشیاء کو پسند کر تے اور میٹھا کھانیکے شائق ہو تے ہیں۔ یہ دل پسند اشیا ء ہم روز کھانا چاہتے ہیں لیکن ان کی روزانہ کھانے کی تمنا صحت کے لیے نا صرف مضر ہے بلکہ کیلوریز میں اضافے کا سبب بنتی ہے۔یہ جسم میں نیو ٹریشن میں اضا فہ نہیں کر تی بلکہ چر بی کی مقدار کو بڑ ھا دیتی ہے۔زیادہ چینی کا استعمال جگر پر چربی پید ا کر تا اور دانتوں کے لیے نقصان دہ ہے۔ اس کے علاوہ چینی کا استعمال متعدد بیماریو ں کو جنم دیتا ہے۔ سب سے بڑھ کر یہ موٹاپے کا باعث بنتا ہے۔
اس کے برعکس اگر قدرتی میٹھے کا استعمال کیا جائے جیسے”گڑ“تو یہ نہ صر ف کیلو ریز میں کم ہو تا ہے بلکہ وزن میں کمی کا سبب بنتا ہے۔ اس لیے گڑ کو وزن کم کر نے کے لیے استعمال کیا جا تا ہے۔جو لو گ وزن کم کر نا چاہتے ہیں وہ چینی (سفید)کی جگہ گڑ کا استعمال کر یں۔ یہ وزن کم کر نے میں آپ کی مدد کرے گا اور جسم کو ضروری معدنی اجزاء بھی مہیا کرے گا۔
کچھ لوگوں کو کھانے کے بعد میٹھے کی خو اہش ہو تی ہے اپنی اس خو اہش کی تکمیل کے لیے وہ میٹھے کے نام پر چینی سے بنے ڈیز رٹ کا استعمال کر تے ہیں جو نہ صر ف وزن میں اضا فے کا سبب بنتے ہیں بلکہ مختلف امراض کا بھی سبب ہو تے ہیں۔
اگر کھانے کے بعد آپ کو میٹھے کی خو اہش ہو تو آپ گڑ کو کینڈی کی طر ح چو سیں۔ اس سے آپ کی طلب بھی کم ہو گی اور کیلو ریز بھی جلیں گی۔
گڑ میں آئر ن کی وافر مقدار پائی جاتی ہے۔ اس میں کیلو ریزنہ ہو نے کے بر ابر ہو تی ہیں۔
گڑ نظام ہاضمہ کے لیے مفید ہے کھانے کے بعد اس کا استعمال کھانے کو جلد ہضم کر تا ہے۔
قبض نہیں ہو نے دیتا۔
اس نظام کو بند کر تا ہے جو مو ٹاپے کاسبب بنتے ہیں۔ اگر نظام ہاضمہ درست نہ ہو تو مو ٹاپے کا باعث ہو تا ہے گڑ کااستعمال ہمارے نظام انہظام کو درست کر تا ہے۔
میٹا بو لزم کو تیز کر تا اور کیلو ریز کو جلاتا ہے۔
یہ ایک قدرتی کلینر ہے جو جسم کی صفائی کر تاہے۔یہ جگر کو نقصان دہ ٹاکسن سے محفو ظ رکھتا ہے۔
آپ کے جسم کو وقتاً فو قتا ًڈی ٹاکس کرتا ہے جو وزن کم کر نے کا سبب بنتا ہے۔
اس میں پو ٹاشیم کی وافر مقدار پائی جاتی ہے۔یہ ایک ایسا منر ل ہے جومسلز اور میٹابو لزم کو نارمل کر تا اور وزن کم کر نے میں مدد دیتاہے۔
(اس کا زیادہ استعمال وزن کو بڑھانے کا سبب بھی بنتا ہے)۔

اپنا تبصرہ بھیجیں