کیلاکرے آپ کے حسن میں اضافہ

قدرتی مصنو عات حسن میں اضافے کا سبب بنتی ہیں۔ یہ کیمیکل فری،سستے اورکسی بھی پیچیدگی کے بغیر ہو تے ہیں۔ ان کا استعمال چہرے کے خلیو ں کو تباہ ہو نے سے بچاتے ہیں۔ ان قدرتی اجزا ء میں سے ایک کیلے کا گو دا ہے۔یہ ہمارے گھروں میں سب سے زیادہ استعمال ہو نے والا اور نظر انداز کیے جانے والا پھل ہے۔ کیلے کا گو دا آپ کو جھریوں اور کیل مہاسوں سے دور رکھتا ہے۔
یہ لیو ٹین، اینٹی آکسیڈنٹ اور وٹامن اے سے بھر پور ہو تا ہے۔ کیلے کے گو دے میں چکناہٹ کی بڑی مقدار مو جو د ہو تی ہے۔ یہ بہت سے لوشنوں میں استعمال ہو تا ہے۔
کیلے کاگو دا استعمال کر نے سے آپ کا چہر ہ کیل مہا سو ں اور جھریو ں سے صاف ہو جاتا ہے۔
کیلے میں وٹامن ای،اے،سی اور بی،پو ٹاشیم، زنک، آئرن اور میگنیشیم پائے جاتے ہیں۔ یہ چہرے کو نمی فر اہم کر نے کے علاوہ نرمی کو بر قر ار رکھتے ہیں۔
کیلے کے چھلکے کو چہرے پر پندرہ منٹ کے لیے دائروں کی صور ت میں اسکرب کر یں۔
اگرا سکر ب کے دوران چھلکا کالا ہو جائے تو اس کا مطلب ہے کہ دو سر ا چھلکا استعمال کر یں۔ اب چہرے کو ٹھنڈے پانی سے دھو لیں۔
کیلے کو میش کر کے چہرے پر رات بھر کے لیے لگا رہنے دیں صبح اٹھ کر دھو لیں یہ چہرے کو حوبصورتی اور نرماہٹ فر اہم کر ے گا۔
کیلے کے چھلکے کا مساج چہرے کی کھردری اور خشکی کو دور کر تاہے۔
ایک کیلے میں آدھا کپ دہی مکس کر کے چہرے پر لگائیں اور بیس منٹ بعد دھو لیں۔ اس سے چہرے کے کالے نشان ٹھیک ہو جائیں گے۔
ایک کیلے میں ایک چائے کا چمچ ہلدی اور چو تھائی کپ دہی شامل کر کے پیسٹ بنا لیں اور پندرہ منٹ تک چہرے پر لگا رہنے دیں۔ اس سے چہرے سے کیل مہاسے اور سرخی (ریش) دور ہو جائے گی۔
ایک کیلے میں ایک کھانے کا چمچ لیمو ں اور شہد ملا کر چہرے پر لگائیں اور پندرہ منٹ بعد دھو لیں۔ اس سے چہرے کے سفید اور کالے نشان دور ہو جائیں گے۔
کیلے کے گو دے میں کچا دودھ، شہد اور چند قطرے عرق گلاب کے شامل کر کے چہرے پر لگائیں اور پندرہ منٹ بعد دھو لیں۔ اس سے چہرہ چمکدار اور پر کشش ہو جائے گا۔
کیلا، ناشپاتی اور شہد کا پیسٹ ملا کر بیس منٹ کے لیے چہرے پر لگائیں۔ یہ خشک اور کھردری جلد کے لیے بہترین ہے۔
ایک کیلے کے گودے میں ایک جو س مالٹااور دہی شامل کرچہرے پر لگائیں۔ خشک ہو نے پر دھو لیں۔ اس سے چہرے کی جھریاں اور لائنز دور ہو جائیں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں