کشمش کو معمو لی نہ سمجھیں

کشمش کسی نعمت سے کم نہیں ہے جو نہا یت لذیذ ہو نے کے ساتھ بے مثال قو ت اور تو انائی کی حامل ہو تی ہے۔اسے صحت و تو انائیفر اہم کر نے کےلحاظ سے ایک اچھو تا اور پر کشش تصور کیا جاتا ہے۔سو ائے انا ر کے ایسی خصوصیات کسی میں نہیں ہیں۔کشمش میں پروٹین ،وٹامنز اور منر ل وافر مقدار میں پائے جاتے ہیںیہ جلد ہضم ہو جاتی ہے۔اس کے استعمال سے طبیعت بو جھل نہیں ہو تی نہ ہی معدے پر بھاری پن ہو تا ہے بلکہ یہ دو سری غذاؤں کو بھی ہضم کر تی ہے۔
کشمش انگو ر کو خشک کر کے بنائی جاتی ہے۔اس کی رنگت گو لڈن ،سبز اور سیاہ ہوتی ہے ۔یہ فا ئبر سے بھر پور ہو نے کے ساتھ اس میں ٹار ٹا رک ایسڈ بھی شامل ہو تا ہے جو ہلکے جلا ب جیسا اثر دکھاتا ہے۔
آئر ن کی کمی کو پور ا کر تی ہے۔
شو گر کے مر یض اس کا استعمال اعتدال سے کر یں۔
اس میں مو جو د اینٹی آکسیڈ نٹس وائر ل بیکیڑیا سے ہو نے والے بخار کو دور کر تی ہے۔
اس میں مو جو د پو ٹا شیم اور میگنیشیم معدے کی تیز ابیت میں کمی لاتی ہے۔
جوڑوں کے امر اض میں مفید ہے۔
امر اض قلب اور کینسر کے خطر ے کو کم کر تی ہے۔
اس میں مو جو د آئر ن بے خو ابی کے مر ض کو دور کر تی ہے ۔
بلڈ پر یشر کو معمو ل میں رکھنے میں مدد دیتی ہے۔
اس میں مو جو د پو ٹا شیم خو ن کی شریانوں کے تناؤ کو کم کر تا ہے۔ اس میں مو جو د آئر ن شریانوں کی اکڑن کو کم کر تا ہے۔
یہ ریشے سے بھر پور ہا ضمہ بہتر بناتی ہے۔
اس کا استعمال آپ کے جسم کو مختلف انفیکشنز سے بچاتا ہے۔
کشمش جسم میں خو ن پیدا کر نے کا سبب بنتی ہے۔
اگر جگر خو ن پیدا کر نا بند کر دے تو انسانی صحت جو اب دے دیتی ہے۔جس سے جسم کمزور ہو جاتا ہے اور رنگ پیلا پڑ جاتا ہے ایسے
افر اد کے لیے کشمش بہتر ین دو ا ہے۔
نئے خو ن کی پیداوار کے بغیر جسم سو کھنا شروع ہو جاتا ہے قدرت نے کشمش میں یہ خو بی رکھی ہے کہ یہ جسم کو فر بہ اور صحت مند کر تا ہے۔
کشمش قبض دور کر تی ہے۔
زیادہ کھانے سے اسہا ل ہو سکتا ہے۔
آنتوں اور معدے کو طا قت دیتی ہے۔
جسم کو مو ٹا کر تی اور پر کشش بناتی ہے۔
بچوں کے دانت نکلنے میں آسانی ہو تی ہے ۔اس کا استعمال ان بچو ں کے لیے بہترین ہے جن بچو ں کے منہ اور حلق میں چھالے پڑ جاتے ہو ں۔
کمزور اور سو کھے بچوں کو کشمش کھلانا جسم کو فر بہ کر تی ہے۔
کشمش بلغمی امر اض میں مفید ہے۔
کھانسی اور زکام کے لیے بہترین دو ا ہے۔
درد شقیقہ اور جسمانی کمزور ی میں اہم ہے۔
جن لوگوں کو قطر ہ قطر ہ پیشاب آتا ہو وہ کشمش کا استعمال کر یں۔
گر دے کی پتھری اور کمزور ی کو دور کر تی ہے۔
کشمش خو ن میں شو گر کی سطح کو اعتدال پر لاتی ہے۔
اس میں مو جو د معد نیات ہڈیو ں اور آنکھوں کی متعدد بیماریو ں کے لیے مفید ہیں۔
کشمش سے نہ صر ف دانتوں کے امر اض نہیں ہو تے بلکہ یہ دانتوں کو کیڑا لگنے سے بچاتی ہے۔
جسم کی تھکاوٹ کو دور کر تی ہے۔
رسو لی بنانے والے خلیو ں کو پید ا ہو نے سے روکتی ہے۔
سینے کی بیماریو ں سے محفو ظ رکھتی ہے۔
چو بیس گھنٹے پانی میں بھگوکر کشمش پینے سے دائمی قبض دور ہو تی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں