پلا سٹک بو تل میں مو جو د کیمیکل بچوں کے لیے زہر ۔۔۔۔۔ما ہر ین

الینو ائے: ما ہر ین نے خبر دار کیا ہے کہ پلا سٹک بو تلوں میں مو جو د کیمیکل بچو ں کی ذہنی اور جسمانی صحت کو شد ید نقصان پہنچاتے ہیں۔ جد ید تحقیق کے مطا بق ما حو ل میں پارہ اور سیسہ ،زراعت میں استعمال ہو نے والی کیڑے مار ادویہ میں شامل آرگینو فاسفیٹ، پو لی بر ومینیٹڈڈائی فینا ئل ارتھیر ز اور پلا سٹک بو تلو ں کا عام کیمیکل فلیٹیس اور میک اپ کے اجز ا ء بھی بچو ں کے لیے نقصان دہ ہو سکتے ہیں۔
ما ہرین کے مطا بق تیز رفتار صنعتی زندگی نے بچوں اور بڑوں کو مضر کیمیکلز سے گھیرلیا ہے۔اگرچہ ان میں سے کئی کیمیکلز پرپابندی عائدکی جاچکی ہے لیکن عشروں کے بعد اب بھی وہ ما حو ل میں مو جو د ہیں اور انسان کو متا ثر کر رہے ہیں۔
ماحولیاتی ماہرین ایک عرصے سے پلا سٹک کی بوتلوں اور فیڈرمیں موجود فلیٹیس مرکبات کاجائزہ لے رہے ہیں اور ماہرین کا کہنا ہے کہ شیرخواربچو ں اور حاملہ ماؤں میں کیمیکل مضر صحت ثابت ہو سکتا ہے اور بچو ں کی دما غی نشو ونما کو تبا ہ کر تا ہے ۔
یو نیو رسٹی اور الینو ائے کے پر و فیسر کے مطا بق کیمیا ئی اجز اء ہمارے گھر اور اطر اف میں مو جو د ہیں۔کو شش کی جائے کہ بچو ں کے مستقبل کے لیے ان کیمیکلز سے دور رہنے کی بھر پور کو شش کی جائے ۔سائنسدانو ں کا کہنا ہے کہ اس امر کی شد ید ضرورت ہے کہ مضر کیمیکلز سے دور رہا جائے ۔خصو صاً بچو ں کو ان سے دور رکھا جائے ۔ کیو نکہ اپنی پیدائش کے کئی سالو ں بعد بھی بچو ں کا دما غ بنتا اور پر وان چڑ ھتا ہے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں