خر اٹے آپ کی نہیں دوسروں کی نیند کے دشمن

ہم میں سے اکثر لو گ ایسے ہیں جو خر اٹے لیتے ہیں اس کے با وجو د خر اٹو ں کا شو ر ان کو پریشان نہیں کر تا بلکہ ساتھ سوئے فر د کی نیند حر ام کر دیتا ہے۔خر اٹے لینے والا خو د تو سا ری رات چین کی نیند سو تا ہے اور دو سر ا فر د یہی سو چتا رہ جاتا ہے کہ ا س کے خر اٹے کب ختم ہو ں اور وہ بھی نیند کی آغوش میں جائے ۔ خر اٹو ں کو عمو ماً آرام دہ نیند سے تشبیہ دی جاتی ہے کچھ لو گ تھکا وٹ کی وجہ بھی خراٹو ں کو قر ار دیتے ہیں۔ جبکہ ما ہر ین اس خیال کو غلط قر ار دیتے ہو ئے کہتے ہیں کہ نیند میں خر اٹے لینا آکسیجن کا ٹھیک طر ح سے جسم میں نہ جانا ہے جس کی وجہ سے جبڑے ،حلق،زبان کے عضلات انتہائی پر سکو ن ہو جاتے ہیں ۔
کچھ لو گ خر اٹوں کو معمو لی بات سمجھتے ہیں لیکن حقیقت میں ایسا نہیں ہے کیو نکہ خر اٹو ں کے با عث آپ آٹھ گھنٹے کی نیند لینے کے با وجو د تھکاوٹ کا شکا ر رہتے ہیں۔
خر اٹے لینے والوں کے بارے میں خو فناک کن ریسر چ سامنے آئی ہے کہ جو لوگ نیند میں خر اٹے لیتے ہیں توخون کی مہلک قسم کی پھٹکیاں بننے کاامکا ن زیادہ ہو جاتا ہے ۔جن لوگوں میں خر اٹوں کی طبی تشخیص ہو ئی ان میں خر اٹے نہ لینے والوں کے مقا بلے میں ڈی وی ٹی کاخطر ہ تین گنا بڑھ جاتا ہے۔ڈی وی ٹی دراصل خو ن میں جمع ہو ئی پھٹکی کا دو سر ا نا م ہے جو عمو ماً ٹانگوں میں دیکھی جاتی ہے۔یہ پھٹکی بعض اوقات ٹو ٹ کر پھیپھڑوں کی تنگ نالیو ں میں جا پہنچتی ہے اگر وہا ں پھنس جائے تو مو ت بھی واقع ہو سکتی ہے۔اس صور ت کو pulmonary embolism کہتے ہیں۔ٹانگ کی رگ میں خو ن اس وقت جمنے لگتا ہے جب بہت دیر تک ایک ہی جگہ پر بیٹھنا یا لیٹنا پڑے۔اس لیے کہا جاتا ہے کہ خر اٹو ں سے ہا رٹ اٹیک کا خطر ہ بھی بڑھ جاتا ہے۔ عمو ماً کہا جاتا ہے کہ معدے کی خر ابی بھی خر اٹو ں کا باعث بنتی ہے۔
علا ج
ایک ہی پو زشن میں لیٹے رہنے سے گلے کے مسلز کھینچ جاتے ہیں اور نز دیک آجاتے ہیں جس سے سانس لینے میں وائبر یشن ہوتی ہے جوخراٹوں کا باعث بنتی ہے۔اگر آپ اپنی پو زشن بد ل کر سو ئیں تو ا س مسئلے پر قابو پا یا جاسکتا ہے۔
سر اونچا رکھ کر سو ئیں
کچھ لو گ بند ناک کی وجہ سے بھی خر اٹے لیتے ہیں اس کے لیے ضرور ی ہے کہ اپنی ناک کو صا ف ستھر ا رکھیں۔
پو دینے کا تیل ناک کے گر د مل لینے سے سانس لینے میں آسانی ہو تی ہے اور خر اٹے نہیں لیے جاتے جبکہ پو دینے کاماؤتھ واش گلے کے ٹشوز کے خلا ف مدد گار ثا بت ہو تا ہے۔
مو ٹا پے کے شکار افر اد بھی اس بیماری میں مبتلا ہو تے ہیں اس لیے ضرور ی ہے کہ اپنے وزن کو کم کر نے کی کو شش کی جائے ۔
سو نے سے پہلے بھاپ لیں۔
گھر یلو ٹو ٹکے
ایک ٹکڑا ادرک ، چو تھائی لیمو ں، دو گا جر یں ، دو سیب ان سب کا مشروب بنا لیں اور سو نے سے پہلے پی لیں اس سے خر اٹے بند اور آپ پر سکو ن نیند سو سکیں گے۔
کالی مر چ دس گر ام ، ملھٹی بیس گر ام ، ست پو دینہ ان سب کو مکس کر کے رکھ لیں اور سو نے سے پہلے آدھا چمچ شہد میں مکس کر کے کھائیں اس سے خر اٹوں سے جان چھو ٹ جائے گی۔
سرسوں کے تیل کو رات سو نے سے پہلے چار پانچ قطر ے دونوں ناک میں ڈالیں قطر ے آہستہ آہستہ ڈالیں ۔اس سے کچھ دنوں میں خر اٹے آنے ختم ہو جائیں گے۔

کیٹاگری میں : صحت

اپنا تبصرہ بھیجیں