بچو ں میں ضروری منرلز

بچو ں اور نو جو انوں میں نیو ٹریشن کی ضرورت مختلف ہو تی ہے۔ بچوں کو وٹامنز اور منرلز کی اشد ضرورت ہو تی ہے۔ ان کے بغیر اور کمی کی وجہ سے بچو ں کی صحت بر ی طر ح متاثر ہو تی ہے۔ اگر بچوں میں ان وٹامنز اور منرلز کی کمی ہو جائے تو بچوں میں اندھا پن، کمزوری،نقاہت،جسمانی اعضا ء کی خر ابی،ہڈیوں کی بیماری، دانتوں کا ٹو ٹنا، خو ن کی کمی، دماغی کمزوری، قد اور وزن کا نہ بڑھنا اور نظام انہظام کے مسائل جنم لیتے ہیں۔
اس لیے جہاں تک ممکن ہو سکے بچوں میں ان وٹامنز اور منرلز کی کمی نہ ہو نے دیں کیو نکہ ان کی کمی ان کے مستقبل کو خر اب کر سکتی ہے۔ اچھی صحت اور بھرپور تو انائی کے لیے اچھی اور صحت مند غذا کا ہو نا ضروری ہے۔
کیلشیم
کیلشیم بچوں کی ہڈیوں اور دانتوں کے لیے بے حد ضروری ہے۔ ان کی کمی سے بچوں کی ہڈیاں اور دانت بر ی طر ح متاثر ہو تے ہیں۔
ایک سے تین سال کے بچے کو ۰۰۷گرام کیلشیم کی ضرورت ہو تی ہے۔
چار سے آٹھ سال کے بچوں کو ۰۰۰۱ ملی گرام کیلشیم کی ضرورت ہو تی ہے۔
نو سے اٹھارہ سال کے بچوں کو ۰۰۳۱ ملی گرام کیلشیم کی ضرورت ہو تی ہے۔
یہ ڈیری مصنو عات،مچھلی اور ہرے پتوں والی سبزیوں میں پائی جاتی ہیں۔
فائبر
فائبر منرلز اور وٹامن نہیں ہے لیکن جن کھانوں میں فائبر کی خاصی تعداد پائی جائے ان میں وٹامن ای، سی، کیلشیم، میگنیشیم اور پو ٹاشیم پائے جاتے ہیں۔
ہر چو دہ گرام فائبر ہر ۰۰۰۱ کیلو ریز میں لینا چاہئے۔
یہ بیریز، بروکلی،ناشپاتی،اوٹس ہر قسم کے بیجو ں اور مختلف قسم کی سبزیو ں میں پایا جا تا ہے۔
وٹامن ڈی
وٹامن ڈی کیلشیم کے ساتھ کام کر تا ہے۔یہ بیماریوں کے خلاف قو ت مد افعت پیدا کر تا ہے۔ بچوں کو ہر روز ۰۰۴آئی یو کی ضرورت ہو تی ہے۔یہ انڈوں، سبزیوں اور گوشت میں پایا جاتا ہے۔
وٹامن ای
یہ نظام انہظام کو مضبو ط کر تا اور خو ن کی نالیو ں کو صاف کر کے خو ن کے بہاؤ کو بہتر کر تا ہے۔یہ سبزیوں کے تیل، خشک میو ہ جات، بیجو ں اور بادام میں پایا جاتا ہے۔
آئرن
آئرن سرخ خلیات کو بنانے میں مدد کر تا ہے۔
آئرن بچوں میں سات سے دس ملی گرام روزانہ کے حساب سے ان کی عمر کے مطابق ہو نی چاہیے۔
یہ سرخ گو شت، ہرے پتوں والی سبزیوں اور پھلوں میں پایاجاتا ہے۔ اس کی کمی بچوں میں بہت سے خو ن کے مسائل کو جنم دیتی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں