بچوں میں نز لہ زکام

زکام سب سے زیادہ پھیلنے والا وائرس ہے۔اس کا وائرس تیزی سے پھیلتا ہے خاص طور پر مو سم کے بدلنے پر یہ جلد حملہ آور ہو تا ہے۔ کیو نکہ بچوں میں قو ت مد افعت کی کمی ہو تی ہے اس لیے یہ وبا ان میں زیادہ دیکھی گئی ہے۔
مو سم کے بد لنے پر انفلو ائز خا صا تندو صحت مند ہو تا ہے۔ اس کاانفیکشن اکتو بر میں اپنے عروج پر ہو تا ہے۔ کیو نکہ گرمی دم تو ڑ رہی ہو تی ہے اور سر دی کی سانسیں بلند ہو نے کو ہو تی ہیں۔ ایسے میں نزلہ زکام بر ی طرح حملہ آور ہو تے ہیں۔ بالکل ایسے ہی گرمی کی آمد پر مو سم ٹھنڈا گرم ہو تا رہتا ہے جس کی وجہ سے یہ وائرس حملہ کر نے میں وقت ضائع نہیں کر تا۔
زکام گرمی کا ہو یا سر دی کا بچوں کو بر ی طر ح متاثر کر تا ہے کیو نکہ یہ جتنی جلد ی حملہ آور ہو تا ہے اتنی ہی تیز ی سے پھیلتا ہے جس کی وجہ سے بچہ درج ذیل امراض میں مبتلا ہو جاتا ہے۔
بخار
ناک کا مسلسل بہنا
جسم درد
ٹھنڈ
سانس لینے میں دشو اری
متلی
اگر بچہ پانچ سال سے زائد کا ہو تو اس کو درج ذیل ٹو ٹکے دئیے جا سکتے ہیں۔
غر ارے
نیم گر م پانی میں نمک ڈال کر غر ارے کریں۔ اس سے گلے کی سو جن دور ہو گی اور سکو ن ملے گا۔
پانی پئیں
زیادہ سے زیا دہ پانی کااستعمال کریں۔ جو س،سوپ، پانی جو وہ آسانی سے پی سکتے ہو ں۔
شہد لیں
شہد کسی بھی عمر کے بچے کو دیاجا سکتا ہے۔ ہر آدھے گھنٹے بعد شہد کا ایک چائے کاچمچ دیں۔
بھاپ لیں
آج کل یہ ہر عمر کے بچے کو دے دی جاتی ہے۔ اس سے بند ناک کھلتی ہے،چھاتی صاف ہوتی ہے جس سے بچہ کھل کر سانس لیتا ہے۔
چکن سو پ
چکن سو پ سر دی کے زکام میں بہترین ہے۔ اس کااستعمال نزلہ زکام کو جلد ٹھیک کر نے میں مدد دے گا۔
بچے کا سر اونچا رکھیں
اگر بچہ بارہ ماہ سے زیادہ ہے تو اس کا سر اونچا رکھ کر لٹائیں یعنی اس کے سر کے نیچے تکیہ یا کو ئی تو لیہ رکھ دیں۔ ایسا کر نے سے بچے کو سانس لینے میں آسانی ہو گی۔
شہد اور لیموں
پانچ سال سے زائد عمر کے بچے کو نیم گرم پانی میں شہد اور لیمو ں ڈال کر دیں۔ اس سے اس کو نز لہ زکام میں سکو ن ملے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں