آن لائن مطالعہ کر نے والے ہو جائیں ہو شیار۔۔۔ تحقیق

اوسلو: ناروے میں آٹھو یں جماعت کے بچو ں پر کئے گئے ایک مطالعہ میں انکشاف ہو ا ہے کہ جو لوگ اسمارٹ فون، ٹیبلیٹ یا کمپیو ٹر پر کتابیں اور دو سر ا تحریر ی مو اد پڑھنے کے عادی ہو تے ہیں انھیں کسی خا ص مو ضو ع پر تو جہ مزکور کرنے میں دشو اری کا سامنا رہتا ہے۔
اوسلو یو نیو رسٹی کی پروفیسر مارٹی بلکسٹاڈبالاس نے ناروے میں بچو ں پر ایک تفصیلی تحقیق میں کلیدی کر دار ادا کیا۔
ماہرین کاکہنا ہے کہ نیٹ اسکرین پر مواد پڑھنے والے بچوں کی یاداشت دو سرے بچوں کی نسبت کمزور ہو تی ہے اور ان کو لفظ پڑھنے میں مشکل کا سامنا کر نا پڑتاہے۔ ہمارے دماغ پر کسی بھی نکتے پر تو جہ مرکوز کر نے کی صلاحیت متاثر ہوتی ہے اور ہمیں تسلسل سے طویل جملے پڑھنے کی عادت نہیں رہتی۔
روایتی کتابیں ہاتھ میں لے کر پڑھنے سے یاداشت تیز ہو تی ہے۔ٹیکنالو جی میں ترقی کے باعث ناروے میں کا غذ پر چھپی کتابو ں کا رواج کم ہو گیا ہے۔ لیکن ماہرین اس نئی تحقیق سے پریشان ہیں کہ ڈیجیٹل مو اد یاداشت کی کمزوری کا سبب بن رہی ہے۔ ماہرین کاکہنا ہے کہ کو ئی بھی کتاب ہاتھ میں لے کر پڑھنا زیادہ مناسب ہے بجائے کہ اس کو نیٹ سے پڑھا جا ئے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں